HTV Pakistan

پلاسٹک کی خوشنما چوڑیاں خواتین کی اولین ترجیح

پڑھنے کا وقت: 2 منٹ

رنگ برنگی نگینوں سے مزین پلاسٹک کی چوڑیاں اور کنگن ان دنوں نوجوان لڑکیوں میں تیزی سے مقبولیت حاصل کررہے ہیں۔ جدید سٹائل کی یہ چوڑیاں اور کنگن اپنے خوشنما رنگوں اور ہلکے پھلکے وزن کی وجہ سے محض تقریبات میں ہی نہیں بلکہ عام زندگی میں پہننے کیلئے بھی نوجوان لڑکیوں کی اولین ترجیح بنے ہوئے ہیں۔ پلاسٹک سے تیار کردہ ہونے کی وجہ سے یہ چوڑیاں اور کنگن استعمال کے دوران بہت زیادہ احتیاط کے متقاضی نہیں ہوتے جبکہ دھات کی بنی ہوئی مصنوعی چوڑیوں کی طرح پانی لگنے کی وجہ سے ان کے کالا ہونے کا بھی ڈر نہیں ہوتا۔

یہی وجہ ہے کہ لڑکیاں انتہائی شوق کے ساتھ ایسی چوڑیاں پہننا پسند کرتی ہیں۔ نرم پلاسٹک سے تیار کردہ یہ چوڑیاں بازاروں میں دستیاب دیگر اقسام کی چوڑیوں اور کنگن کی نسبت بہت زیادہ مہنگے نہیں ہیں جس کی وجہ سے نوجوان لڑکیاں اور بالخصوص طالبات خریداری کے دوران بیک وقت کئی سوٹوں سے میچنگ چوڑیاں یا کنگن خرید کر انہیں شوق سے بانہوں میں سجاتی اور دوستوں کو تحفے میں دیتی ہوئی نظر آتی ہیں۔ نگینوں سے مزین چوڑیوں کے علاوہ پلاسٹک جیولری کی ورائٹی میں خوشنما پرنٹس پر مشتمل چوڑیاں بھی بکثرت دستیاب ہیں جبکہ چوڑے چوڑے کنگنوں پر بنائے گئے یہ انواع و اقسام کے پرنٹ خواتین کی توجہ اپنی جانب مبذول کرائے بنا نہیں رہ سکتے۔

دیگر ڈیزائنوں میں پلاسٹک کی انواع و اقسام کی ٹکڑیوں کو جوڑ کر تیار کردہ خوشنما ڈیزائن بھی کافی مقبول ہیں جبکہ کالجوں اور یونیورسٹیوں میں زیرتعلیم طالبات محض کسی ایک رنگ کی چوڑیاں یا کنگن پہن کر مطمئن ہونے کی بجائے بیک وقت بانہوں میں کئی کئی رنگ سجالیتی ہیں جو کبھی تو انتہائی بولڈ محسوس ہوتے ہیں تو کبھی ان کی نازک کلائیوں میں انوکھی بہار پیش کرتے ہیں۔ اکثر لڑکیوں کے مطابق ان چوڑیوں کی اہم ترین خوبی یہ ہے کہ انہیں پہننے اور اتارتے وقت بہت زیادہ احتیاط کی ضرورت نہیں ہوتی اسی لئے جب چاہا پہن لیا اور جب چاہا اتار کر بیگ میں رکھ لیا،

اس کے برعکس کانچ کی چوڑیاں پہننے اور اتارتے وقت کلائیاں اور ہاتھ ز خمی ہونے کا ڈر ہوتا ہے جبکہ اتار کر رکھنے کا ارادہ ہو تو دس بار ان کی حفاظت کے بارے میں سوچنا پڑتا ہے۔ اسی طرح دھات کی چوڑیوں کی بات ہو تو ان کی حفاظت کے بارے میں سوچنا پڑتا ہے۔ اسی طرح دھات کی چوڑیوں کی بات ہو تو ان کی حفاظت کے ضمن میں بہت زیادہ احتیاط کرنی پڑتی ہے اگر ان پر تھوڑا سا پرفیوم بھی لگ جائے تو کالی ہوجاتی ہیں جبکہ پلاسٹک کی یہ چوڑیاں ہر لحاظ سے خوبصورت اور باسہولت ہوتی ہیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*